Home / پاکستان / العزیزیہ کیس،نوازشریف کی سزا اورجرمانہ ختم ہوگایانہیں؟سماعت آج سےشروع

العزیزیہ کیس،نوازشریف کی سزا اورجرمانہ ختم ہوگایانہیں؟سماعت آج سےشروع

العزیزیہ ریفرنس میں سزا معطلی کی درخواست پر اسلام آباد ہائیکورٹ میں آج پہلی سماعت ہو رہی ہے۔ چیف جسٹس اطہر من اللہ کی سربراہی میں دو رکنی بینچ سماعت کرے گا۔ اس سے قبل احتساب عدالت نے نواز شریف کو سات سال قید اور اربوں روپے جرمانے کی سزا سنائی تھی۔

درخواست میں مؤقف اختیار کیا گیا ہے کہ العزیزیہ ریفرنس میں سزا کا فیصلہ پہلے ہی چیلنج کیا جا چکا ہے، لہذا مرکزی اپیل کا فیصلہ آنے تک سزا معطل کی جائے۔یہاں یہ بات بھی قابل ذکر ہے کہ اسلام آباد کی احتساب عدالت نے سابق وزیراعطم کو سات سال قید اوراربوں روپے جرمانے کی سزا سنائی ہے۔ نیب نے بھی فلیگ ریفرنس میں نواز شریف کی بریت کے خلاف اور العزیزیہ ریفرنس میں سزا بڑھانے کیلئے اپیلیں دائر کررکھی ہیں۔اس سے قبل العزیزیہ ریفرنس میں سابق وزیراعظم نواز شریف کی سزا معطلی کی درخواست اسلام آباد ہائی کورٹ کے رجسٹرار آفس کے اعتراضات دور کرکے تیسری بار دائر کی گئی تھی۔احتساب عدالت کے فیصلے کے خلاف یکم جنوری کو اپیل دائر کی گئی تھی جس میں نواز شریف کی سزا کی معطلی اور ضمانت پر رہائی کی اپیل کی گئی تھی تاہم اسلام آباد ہائیکورٹ کے رجسٹرار نے درخواست کو نامکمل قرار دے کر واپس کردیا تھا۔ بعد ازاں نواز شریف کے وکلاء نے 3 جنوری کو درخواست کو مکمل کرکے ایک بار پھر دائر کیا تاہم رجسٹرار نے گذشتہ روز دوسری بار سابق وزیراعظم کی اپیل پر اعتراض لگا کر اسے واپس کردیا تھا۔سابق وزیراعظم کو پاناما کیس کے فیصلے کی روشنی میں دائر ایون فیلڈ ریفرنس میں بھی 11 سال کی سزا سنائی گئی جس میں ان کی صاحبزادی مریم نواز اور داماد محمد صفدر بھی سزا پاچکے ہیں، تاہم اسلام آباد ہائیکورٹ نے تینوں کی سزا معطل کرکے ان کی ضمانت پر رہائی کا حکم دے دیا تھا۔

Facebook Comments

About Web Desk

Check Also

وزیراعظم چاہیں تو سندھ حکومت گر جائے گی، فواد چوہدری

 وزیر اطلاعات فواد چوہدری کا کہنا ہے کہ وزیراعظم عمران خان اگر نظرثانی کرلیں تو …